میں ایک لکھاری ہوں

میں ایک لکھاری ہوں
درد محسوس کرنا کام ہے میرا
خوابوں کی سوداگر ہوں
اپنے احساس کو
لفظوں میں ڈھالتی ہوں
اپنے تخیل کو پالتی ہوں
پہروں کہانی بنتی ہوں
اور پھر
اپنے خواب ،اپنے احساس
اپنے تخیل کو ،اپنی بنی کہانی کو
آنکھیں دینے والے کے ہاتھ سونپ دیتی ہوں
کیونکہ میں ایک لکھاری ہوں

سیما شیخ